×

هشدار

JUser: :_بارگذاری :نمی توان کاربر را با این شناسه بارگذاری کرد: 830

ماموں جان ۔ الیکٹرانک ووٹنگ مشین

مهر 07, 1392 0 677

بھانجہ: ماموںجان ،یہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین کا کیا قصہ ہے، سپریم کورٹ نے ایک اور بٹن میں اضافہ کرنے کا حکم دیا ہے۔ ماموں جان:

بیٹا ہر الیکشن میں ایسا ہوتا رہا ہے کہ ووٹر اپنا قیمتی ووٹ لئے لئے گھومتا رہتا تھا۔اس کا ووٹ قیمتی تو تھا لیکن کسی کام کا نہیں تھا۔جب اس کے سمجھ میں نہ آتا کہ کسے ووٹ دے تو وہ الیکشن کے روز گھر سے باہر ہی نہیں نکلتا تھا۔
 اسے اس بات کا بھی حق نہیں تھاکہ وہ احتجاج کرے کہ وہ کسی امیدوار سے راضی نہیں ہے۔اسی بات کا خیال رکھتے ہوئے سپریم کورٹ نے الیکشن کمیشن کو حکم دیا ہے کہ ووٹنگ مشین میں ایک اوربٹن کا اضافہ کرے کرے کہ جتنے بھی فہرست میں امیدوارہیں ان میں سے کوئی ایک بھی ووٹ کااہل نہیں ہے۔
ویسے بھی معلق اسمبلی یا پارلیمنٹ  کے نتیجے میں آپ نے جس امیدوار کواپنا قیمتی ووٹ دیا ہے وہ آپ کی ناپسندیدہ پارٹی سے روپئے لے کر اس کے ساتھ ہو جاتا ہے۔اس لئے آپ کی رائے کی کوئی اہمیت نہیں رہ جاتی اور نہ ہی ووٹ کی کوئی قیمت۔

Last modified on پنج شنبه, 08 خرداد 1393 12:35

Leave a comment

Make sure you enter all the required information, indicated by an asterisk (*). HTML code is not allowed.