×

هشدار

JUser: :_بارگذاری :نمی توان کاربر را با این شناسه بارگذاری کرد: 830

کیا صرف شیعہ عیقدہ مہدویت کے پیروکار

مرداد 09, 1393 455

بعض لوگ شاید یہ گمان کریں کہ ظہور حضرت مھدی منتظر علیہ السلام کا عقیدہ صرف شیعہ قوم رکھتی ہے اور مھدی موعود کے بارے میں

صرف شیعہ کتب میں روایات واحادیث ملتی ہیں ایسا نہں ہے بلکہ اھل سنت کی کتب و جوامع حدیث میں بھی مھدی موعود کے بارے میں بے حد روایات ہیں بلکہ اھل سنت کے اکابر علماء ومحدثین نے مھدی موعود کے موضوع پر دسیوں بلکہ سیکڑوں کتابیں لکھی ہیں لھذا ہم یہاں پر اختصار سے مھدی موعود کےبارےمیں قرآن و روایات کی بشارتیں اوران اھل سنت حضرات کے نام ذکر کر رہے ہیں جنہوں نے مھدی موعود کے بارے میں احادیث و روایات نقل کی ہیں اسی طرح ہم اھل سنت علماء ومحدثین کی کتابوں کا بھی ذکر کریں گے جنہوں نے اپنی کتابوں میں مھدی موعود کے بارےمیں روایات نقل کی ہیں ۔
امام مہدی(عج اللہ فرجہ الشریف) کا موضوع ایسا موضوع نہیں ہے کہ محض شیعہ حضرات اس پر ایمان رکھتے ہیں بلکہ اس موضوع پر تمام اسلامی دانشور خواہ وہ کسی بھی مذہب اور مکتب فکر سے تعلق رکھتے ہوں سب متفق ہیں نیز سب کا اس بات پر بھی اتفاق ہے کہ وہ رسول صلی اللہ علیہ وآلہ کے خاندان سے ہوں گے ۔ ہاں البتہ اس حوالے سے اہل سنت میں اختلاف نظر موجود ہے کہ آیا وہ امام حسن(ع) کی اولاد میں سے ہوں گے یا امام حسین(ع) کی اولاد میں سے ہوں گے یا یہ کہ آیا وہ پیدا ہوچکے ہیں یا پیدا ہوں گے؟
ان واضح حقائق کے مقابلے میں حضرت مہدی(عج) کی شخصیت کے بارے میں شکوک وشبہات ایجاد کرنا اور آپ کی شخصیت کو کسی ایک فرقے سے منسوب کرنے کی کوشش واقعیت پر پردہ ڈالنا ہے، اسلام کے ایک بنیادی عقیدہ کو دبانا اوراسلام کو ضعیف کرنا ہے ، اور آج کی حالت کو دیکھ کر کہا جا سکتا ہے ، یہ منفی پڑوپیگینڈہ یقینا ، جہل کی بنیاد پر نہیں علم کی بنیاد پر کیا جا رہا ہے ، اس مذموم پروپیگینڈے کا اصل مرکز دنیا کے کسی اور گوشے میں ہے، جسے برصغیر بالخصوص وطنِ عزیز پاکستان میں بھی پھلانا چاہتے ہیں جس سے غافل نہیں رہا جاسکتا، اس سلسلے میں کچھ توضیحات دیں گے تاکہ جوانان اسلام زیادہ سے زیادہ اسلام دشمن عناصر کی حقیقت اور ان کے ناپاک عزائم سے آشنا ہو سکیں ۔

Login to post comments