×

هشدار

JUser: :_بارگذاری :نمی توان کاربر را با این شناسه بارگذاری کرد: 830

مہدی آخر الزمان (عج) عیسائی کتب میں

مرداد 10, 1393 389

عیسائی مذہب اور مقدس کتب میں موعود آخرالزمان کے بارے میں واضح بشارتیں موجود ہیں۔ انجیل متی، لوقاء، مرقس، برنابا اور یوحنا کے مکاشفات

اس سلسلے میں خاص طور پر قابل ذکر ہیں۔
عیسائی کہتے ہیں کہ عیسی (ع) یہود کے موعود ہیں؛ اور یہودیوں نے عالمی حکومت کی تشکیل میں حضرت عیسی (ع) کی ناکامی کو دستاویز بنا کر اس عقیدے کو رد کردیا ہے۔
انجیل
انجیل برنابا میں حضرت مہدی کے بارے میں بشارتیں صراحت کے ساتھ بیان ہوئی ہیں لیکن چونکہ عیسائیوں کی اکثریت انجیل برنابا کو معتبر نہیں سمجھتے یہاں ہم ان کے ہاں معتبر انجیلوں کی نویدیں اور بشارتیں نقل کرتے ہیں:
1۔ "بجلی مشرق سے ساطع ہوکر مغرب میں ظاہر ہوگی، پسر انسان کے بیٹے (انسان کا بیٹا) کا ظہور بھی ایسا ہی ہوگا ... اس کے بعد پسر انسان کی علامت آسمان میں ظاہر ہوگی، اور اس وقت زمیں کے تمام گروہ و مکاتب کے پیروکار سینہ زنی کریں گے اور پسر انسان کو دیکھیں گے جو آسمان کے بادلوں پر قوت و جلال کے ساتھ آتا ہے ... آسمان و زمین زائل نہیں ہونگے، مگر اس روز اور گھڑی جس کا علم کسی کے پاس بھی نہیں ہے حتی کہ ملائکۃ اللہ کے پاس، سوائے پدر کے اور میرے اور بس ... لہذا تم بھی تیار ہوجاؤ کیونکہ ایسی گھڑی پر پسر انسان آئے گا جس کا تم گماں بھی نہیں کرسکتے ہو"۔
2ـ "… لیکن جب پسر انسان اپنے جلال میں اپنے تمام مقدس فرشتوں کے ساتھ آئے گا اپنے جلال کی کرسی پر بیٹھے گا، اور تمام امتیں اس کے حضور جمع ہونگی اور وہ انہیں ایک دوسرے سے الگ کریں گے؛ جس طرح کہ شبان (گڈریا) بھیڑوں کو بکریوں سے جدا کرتا ہے"۔
3ـ "… آن گاہ تم پسر انسان کو دیکھو جو قوت و جلال عظیم کے ساتھ بادلوں پر آئے گا، اس وقت وہ اپنے فرشتوں کو جہات اربعہ سے، زمین کی انتہاؤں اور فلک کی انتہاؤں سے مجتمع کرے گا۔۔۔ تاہم اس روز اور اس گھڑی کی اطلاع پدر (باپ) کے سوا کسی کے پاس نہ ہوگی، نہ فرشتے مطلع ہونگے اور نہ ہی پسر۔۔۔ پس خبردار رہو اور دعا کرو کیونکہ تمہیں نہیں معلوم کہ وہ وقت کب ہوگا..."۔
4ـ "… کمربستہ رہو اور اپنے چراغ روشن رکھو اور ان لوگوں کی طرح رہو جو اپنے آقا کے منتظر ہیں، کہ کب شادی سے واپس آئیں گے تاکہ جب بھی آئیں اور دروازے پر دستک دیں، فوری طور پر دروازہ کھول دو۔ کتنے خوش بخت ہیں وہ غلام کہ جب ان کے آقا آجائیں انہیں بیدار پائیں ... پس تم بھی تیار اور مستعد رہو کیونکہ پسر انسان اس گھڑی آئے گا جس کا تم گمان تک نہیں رکھتے ہو"۔
قابل ذکر ہے کہ "قاموس کتاب مقدس" کے امریکی مصنف "مسٹر ہاکس" کے مطابق لفظ "پسر انسان" (یا انسان کا بیٹا) انجیل اور اس کے ملحقات (عہد جدید) میں 80 مرتبہ دہرایا گیا ہے جن میں سے صرف 30 مرتبہ یہ لفظ حضرت عیسی (ع) پر صادق آتا ہے (1) اور 50 مرتبہ یہ لفظ اس نجات دہندہ پر صادق آتا ہے جو آخر الزمان میں ظہور کرے گا، عیسی (ع) بھی ان کے ساتھ آئیں گے، اور اس کے لئے جلال و شکوہ ہوگا اور اس کے دن اور گھڑی سے خدا کے سوا کوئی آگاہ نہیں ہے اور وہ حضرت مہدی (عج) کے سوا کوئی نہیں ہے۔
حبشی زبان میں مکاشفات یوحنا نامی کتاب میں عبارت "پسر انسان" پر خاص توجہ دی گئی ہے۔ یہ عبارت عہد عتیق میں انسان کی طرف اشارہ کرنے اور کئی بار (کتاب قرقیال نبی میں) پیغمبر سے خطاب کے لئے استعمال ہوئی ہے۔ کتاب دانیال نبی کے باب 7 میں بیان شدہ رؤیا (خواب) میں بھی یہ عبارت ثبت ہوئی ہے۔ یہ عبارت آیت 13 میں "انسان سے شباہت رکھنے والے موجود" کے لئے استعمال ہوئی ہے جو معمول کے چار حیوانوں کے برعکس قدیمی دنیا میں چار بڑی قوتوں کا مظہر ہے اور قیامت میں اسرائیل کے اہم کردار پر دلالت کرتی ہے۔ مذکورہ کتب مکاشفات میں پسر انسان ایک غیر مادی اور کم و بیش الہی اور ازلی موجود ہے جو اس وقت جنت میں چھپا ہوا ہے اور آخر الزمان میں ظاہر ہوگا تا کہ مُردوں کی رستاخیز (یا حشر اموات) کے بارے میں کے بارے میں فیصلے سنائے۔ مومنین شیاطین کے تسلط سے آزاد ہونگے اور وہ ہمیشہ کے لئے امن و عدل کے ساتھ دنیا پر حکومت کرے گا۔ ان کتب میں یہ موعود "انسان برگزیدہ" کہلایا ہے۔
حوالہ جات:
1۔ قاموس مقدس، ماده پسر خواهر ، صفحه 219۔

Login to post comments