×

هشدار

JUser: :_بارگذاری :نمی توان کاربر را با این شناسه بارگذاری کرد: 830

کوفہ امام زمانہ (عج) کا دارالحکومت!؟

مرداد 14, 1393 628

کئی احادیث میں بیان ہوا ہے کہ امام مہدی (عج) کی عالمی حکومت کا دارالحکومت شہر کوفہ اور ان کی قیام گاہ مسجد سہلہ ہوگی۔

امام باقر (ع) نے فرمایا: "امام مہدی (عج) قیام کریں گے اور کوفہ کی طرف جائیں گے اور اپنی منزل وہیں قرار دیں گے"۔ (1)
ابوبصیر کہتے ہیں: امام صادق (ع) نے فرمایا: "اے ابا محمد! گویا میں دیکھ رہا ہوں کہ قائم آل محمد (ص) اپنے خاندان کے ہمراہ مسجد سہلہ میں نزول اجلال فرما چکے ہیں۔ میں نے عرض کیا: کیا مسجد سہلہ ان کی منزل (رہائش گاہ) ہوگی؟ فرمایا: ہاں! مسجد سہلہ ادریس نبی (ع) کی رہائش گاہ ہے اور خدا نے جو بھی نبی مبعوث فرمایا ہے اس نے اس مسجد میں نماز ادا کی ہے"۔ (2)
ایک روایت میں امام صادق (ع) مسجد سہلہ کے بارے میں فرمایا: "وہ ہمارے صاحب (حضرت مہدی (عج)) کا گھر ہے؛ جب وہ اپنے خاندان کے ہمراہ وہاں سکونت کریں گے"۔ (3)
مفضل نے امام صادق (ع) سے پوچھا: "مہدی (عج) کا گھر کہاں ہوگا اور مومنین کہاں جمع ہونگے؟ فرمایا: "ان کی حکومت کا مرکز شہر کوفہ ہوگا اور ان کی حکومت کا مقام جامع کوفہ ہے اور غنائم کی تقسیم کا مقام مسجد سہلہ ہے جو کوفہ اور نجف کی ہموار و مسطح زمین پر واقع ہے"۔ (4) امیرالمومنین (ع) نے ایک خبر غیبی کے ضمن میں فرمایا: "گویا میں اپنے شیعوں کو مسجد کوفہ میں دیکھ رہا ہوں جو خیمہ زن ہوئے ہیں اور قرآن ـ اسی طرح ـ لوگوں کو سکھاتے ہیں جس طرح کہ وہ نازل ہوا ہے۔ جان لو کہ ہمارے قائم جب قیام کریں گے اس مسجد کی تعمیر نو کا اہتمام کریں گے اور اس کا قبلہ استوار کریں گے"۔ (5)
اس سلسلے میں دوسری روایات بھی نقل ہوئی ہیں۔ (6)
یہ کہ امام مہدی (عج) کوفہ کو کیوں اپنا دارالحکومت قرار دیں گے؟ شاید سبب یہ ہو کہ امام مہدی (عج) کی حکومت عدل، امیرالمومنین (ع) کی حکومت عدل کا تسلسل ہے۔
بعض محققین نے یہ بھی کہا ہے کہ "کوفہ حسین (ع) اور مہدی (عج) کا مشترکہ مرکز ہے؛ امام حسین (ع) مکہ سے کوفہ کی طرف نکلے اور حضرت مہدی (عج) بھی مکہ سے کوفہ تشریف فرما ہونگے اور اس کو دارالحکومت قرار دیں گے، یعنی سیدالشہداء (ع) کا ادھورا مشن پورا کریں گے"۔ (7)
حوالہ جات:
1۔بحارالانوار، ج52، ص225۔
2۔ الکافی، ج3، ص 495۔
3۔ الکافی، ج3، ص495۔
4۔مهدی موعود، ص 12158
5۔ غیبت نعمانی، ص 451
6۔ مزید معلومات کے لئے بحارالانوار ج 52، معجم احادیث المہدی (عج)، شیخ علی الکورانی نیز چشم‌اندازی به حکومت مهدی (عج) ص169، سے رجوع کریں۔
7۔ سید مسعود پورسیدآقایی، عاشورا و انتظار، ص24۔
ترجمہ : فرحت حسین مہدوی

Login to post comments