×

هشدار

JUser: :_بارگذاری :نمی توان کاربر را با این شناسه بارگذاری کرد: 830

کلوریز کے استعمال میں کمی بریسٹ کینسر روکنے میں معاون

خرداد 19, 1393 524

شدید بریسٹ کینسر میں مبتلا خواتین کلوریز ان نیک میں کمی کرکے مرض کو پھیلنے سے روک سکتی ہیں۔ یہ بات ایک سٹڈی میں کی

گئی۔ ریسرچ میں سامنے آیا کہ ڈائیٹ میں کلوریز کی مقدار کم کرکے بریسٹ کینسر کی شکار خواتین مرض کے مزید پھیلاؤ کو کم کرسکتی ہیں۔ یہ سٹڈی جرنل بریسٹ کینسر ریسرچ اینڈ ٹریٹمنٹ میں شائع ہوئی ہے۔ تحقیق میں چوہیا پر تجربہ کیا گیا۔ جب چوہیا کو 30 فیصد کم کلوریز دی ئیں تو اس سے اس کے جسم میں تبدیلی واقع ہوئی جن کو محدود ڈائٹس دی گئی ان میں ٹیومر کے گرد ٹشوز میں زیادہ پروٹیکٹیو پروٹین پیدا ہوئے جو کینسر کے پھیلاؤ کو مشکل بنا دیتے ہیں یہ سٹڈی تھامس جیفرسن یونیورسٹی میں کی گئی۔ موٹاپے سے بریسٹ کینسر کے خطرات بڑھ جاتے ہیں اور کیموتھراپی کے مراحل سے گذرنے والیوں کو ٹریٹمنٹس اور سکرائیڈر دینے سے وزن میں اضافہ ہوتا ہے۔ ایسوسی ایٹ پروفیسر ڈاکٹر نکول سائمون نے کہا کہ کینسر میں مبتلا خواتین کا جب علاج کیا جائے تو اس وقت میٹا بولزم کو دیکھنا ضروری ہے۔ پہلے ریسرچ میں بھی یہ کہا گیا تھا کہ کلوریز کا استعمال محدود کرنے سے ریڈی ایشن تھراپی کے اثرات میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

Login to post comments