×

هشدار

JUser: :_بارگذاری :نمی توان کاربر را با این شناسه بارگذاری کرد: 830

جوار کی روٹی اور مہلک بیماریوں کا خاتمہ

بهمن 01, 1393 403

حسب معمول مریض کے دیکھنے میں مصروف تھا باری پر ایک صاحب نے تعارف کرا یا کہ میرا نا م ما جد رسول خان ہے ۔ پرنٹنگ

کا کا رو بار کر تا ہو ں ۔ طبی مشورے کے لیے آیا ہوں ۔ معائنہ کے بعد خود ہی فرمانے لگے کہ میں اپنے آپ کو مریض محسو س کرنے لگاتھا ۔ جسم کا انگ انگ کمزور اور ٹوٹتا رہتا تھا ۔ اعصاب کھنچے ، دل کے اندر ُمر دنی اور کمزوری غالب رہتی تھی۔ بعض اوقات آنکھو ں کے سامنے اندھیرا چھا جاتاتھا ۔ طبیعت ہر وقت بے چین اور بے قرار رہتی تھی۔ ہلکی دوا ئی استعمال بھی کی، کچھ پرہیز بھی کئیے ۔ وقتی طور پر طبیعت ٹھیک لیکن پھر ویسے،بظاہر کچھ مر ض بھی نہیں لیکن حالت مریضوں جیسی تھی ۔ آہستہ آہستہ میرا سانس پھو لنا شروع ہو گیا ۔ اگر چند قد م بھی چل لیتا تو سا نس بے رفتا ر اور بے قا عدہ ہو جاتا ۔ یہ حالت میرے لیے اور زیا دہ تشویش ناک تھی ۔ میرا گھر کچھ اس طر ز کا بنا ہو ا تھاکہ سیڑھیا ں چڑھنا میری مجبوری تھی اب یا تو گھر چھو ڑ جا ؤ ں یا پھر اس کی کوئی تد بیر کر وں ۔ چونکہ پرنٹنگ کا کارو بار تھا بعض اوقات کوئی وزنی چیز بھی اٹھاتا تو وہ اٹھانا میرے لیے نا ممکن ہو جا تی اور دل کی دھڑکن بہت زیا دہ بڑھ جا تی ۔ چہرہ سر خ ،ہا تھ پا ؤ ں کی رگیں پھو ل جا تیں ۔ اکثر ایسا بھی ہو تا کہ ہا تھ پاؤں سُن ہو جاتے۔ کتنی کتنی دیر تک اوسان بحال نہ ہوتے ۔ گھر میں بچو ں سے محبت اور ان سے کھیلنا میرا دلچسپ مشغلہ تھا ۔ اب کچھ دنو ں سے کھےلنے کو دل بھی نہیں چاہتا تھا کیونکہ بس تھوڑی سی حرکت سے سانس بھی پھو ل جا تا اور جسم ٹو ٹ پھو ٹ جاتا۔ ادھر بچے سا بقہ تر تیب کے مطا بق اصرا ر کر تے کہ ابو ہم سے کھیلیں لیکن ادھر طبیعت اور صحت خود ابو سے کھیل رہی تھی۔ طبیعت میں غصہ اتنا زیا دہ ہو گیا کہ بعض اوقات خود سے شرمندگی ہو نا شروع ہو جا تی ۔ چڑ چڑا پن اور بے چینی بڑھ گئی بات با ت پر لڑنے مرنے کو تیا را ور کئی دوست میرے اس رویہ سے مایو س اور نا را ض ہو گئے۔ ٹینشن ، ڈپریشن سنا تو تھا لیکن آزمایا نہیں تھا اور جب اس سے وا سطہ پڑا تھا بہت زیا دہ پریشا ن ہو گیا ۔ ایک دوست نے ٹیسٹ کر وانے کا مشورہ دیا ٹیسٹ کے بعد پتہ چلا کہ کو لیسٹرول ، یو رک ایسڈ اور ٹرائی سلائی گرائیڈز بہت بڑھے ہوئے ہیں۔ اگر ایسی صورت حال ہو تو آپ کو بھی دل کا دورہ پڑ سکتا ہے یا بر ین ہیمرج یا پھر فا لج ہو سکتا ہے ۔ اب ڈاکٹرو ں نے مزید مہنگے ٹیسٹ اور قیمتی ادویا ت لکھ کر د یں ۔ اسی دوران مارکیٹ کے مخلص دوست نے جب میری بیماری اور ٹیسٹو ں کا حال سنا تو کہنے لگے میں نے آ پ سے بھی زیا دہ قیمتی ٹیسٹ کر وائے اور مہنگی ادویا ت استعمال کیں لیکن افا قہ نہ ہوا۔ میرا قیمتی وقت لیبارٹریو ں اور ڈاکٹرو ں کی لا ئن میں لگ گیا اور بہت سے پیسے ادویا ت اور ٹیسٹوں میںخر چ ہو گئے۔ پھر مجھے کسی نے بتایا کہ جوا رکی روٹی تمام دن کھائیں یعنی گندم کی روٹی کی جگہ سالن کے ساتھ یا کسی بھی چیزکے ساتھ جو آپ کے کھانے کا معمول ہو صر ف جوار کی رو ٹی ہی کھا ئیں۔ میں نے دو ماہ دن میں 3 بار جوار کی روٹی ہی کھائی اور خو ب جی بھر کر کھائی ۔میں بالکل تندرست ہو گیا ۔مجھے امید کی کرن مل گئی مایو س کو کنا رامیسر ہوا۔ فورا ً ایک دیسی چکی پر گیا جوار لی اور اپنی نگرانی میں پسوا کر اٹھا رہا تھا ایک بوڑھی عورت آٹا لینے آئی ہوئی تھی۔ کہنے لگی بیٹا جوا ر کی روٹی ٹائیفائڈ ، پرانا بخار ، جوڑوں کے درد اور جسم کی طاقت کے لیے آزمو دہ ہے اور پھر اشارةً کہا کہ عورتوں کی نسوانی پو شیدہ تکالیف کے لیے بھی بہترین ہے۔ بڑی بوڑھی کے چند الفا ظ نے مجھے تسلی دی اور میرے جذبہ شفا کو امید دی۔ گھر لا کر مستقل جوار کی روٹی کھا نا شروع کر دی ایک ما ہ تک روٹی کھائی لیکن چند دن کھا نے سے ہی میری طبیعت میں واقعی تبدیلی آنا شروع ہو گئی کام کا ج میں دل لگنے لگا ۔ زندگی کی امید پیدا ہوگئی اور محسو س کیا کہ میں تندرستی اور صحت کا سفر طے کر رہا ہوں ۔ خیال آیا کہ پھر ٹیسٹ کرا ؤ ں اب آپ میرے ٹیسٹ ملا حظہ فرمائیں پہلے کو لیسٹرول 295 تھا ۔ اب 167، پہلے TRIGLYCERIDE 438 اب 173۔ پہلے یورک ایسڈ 10 اب 5۔ اس طر ح دوسرے ٹیسٹو ں کی صورت حال تھی ۔ میں نے مارکیٹ کے اس محسن کو بتا یا کہ یہ صورت حال ہوئی ۔اطمینان سے کہنے لگے کہ بس اب تم تندرست ہو گئے ہو اسے چھوڑ دو لیکن میں اسے مزید استعمال کرتا رہا ۔ مزید استعمال سے میرے اندر قوت ، طاقت ، انرجی اور نئی زندگی آنا شروع ہوگئی ۔ اب بھی کبھی کبھی استعمال کر لیتا ہوں ۔ دل چاہتا ہے کہ اس غذا کو زندگی کا معمول بنا لو ں۔ قارئین ما جد رسول خان کی بیماری اور صحت کی کہا نی پڑ ھ لی ۔ اب میرا تجر بہ سنیں ۔ جوا ر ، با جرہ ، مکئی اور چنا برا بر وزن لے کر باریک پسوا لیں اسکی روٹی ، کھیر اور دیگر بہترین ڈشیں استعمال کریں۔ شوگر ، ہائی بلڈ پریشر ، جو ڑو ں کے درد ، جسم کی کمزوری ، اعصابی کھچاؤ ، بدہضمی ، تیز ابیت اور کھٹے ڈکا ر ، جسم کا بڑھنا اور پھولنا یہ تمام امراض بالکل ختم ہو جاتے ہیں۔ ایک نہیں بے شمار واقعات میرے تجربہ میں ہیں کہ لو گو ں نے کس طر ح شفایا بی پائی اور ما یو س مریض کس طر ح تندرست ہوئے ۔ آپ بھی ضرور آزمائیں ۔ قارئین ہر پل شفائی ٹوٹکو ں نسخو ں اور تجر بات کا متلا شی رہتا ہو ں ۔ جب بھی کوئی لا جوا ب نسخہ ملتا ہے۔ آپ کی نذرکر تا ہوں آپ سے درخوا ست ہے کہ آپ بھی اپنے تجر بات مشا ہدا ت ضرورتحریر کریں تاکہ صدقہ جا ریہ بنیں منتظر رہو ں گا ۔ ویسے اگر صرف جوار کی روٹی بھی استعمال کریں تو ما جد رسول خان کے فوائد ملیں گے ۔

Login to post comments