×

Warning

JUser: :_load: Unable to load user with ID: 830

29 اکتوبر کے اہم واقعات

October 28, 2014 230

1492 کونئی دنیا کی تلاش میں نکلے کرسٹوفر کولمبس نے کیوبا کا پتہ لگایا تھا۔
1567ء کو فرانس میں دوسری صلیبی جنگشروع ہوئی۔

1618ء میںانگلینڈ کے حکمراں جیمز اول کے خلاف سازش کے الزام میں سر والٹر ریلے کو موت کی سزا دی گئی۔
1636میں بوسٹن میں ہارورڈ یونیورسٹی قائم ہوئی۔
1690ء میں سیوائے فرانس کے خلاف اتحاد میں شامل ہوا تھا۔
1708 کو سویڈن کے شہنشاہ چارلس یازدہم نے یوکرین پر حملہ کیا۔
1746 میں پیروین میں تباہی خیززلزلے سے 18000 لوگوں کی موت۔
1836 میں پیرو اور بولویا کا وفاق قائم ہوا
1859 اسپین نے ماسکو کے خلاف جنگ کا اعلان کیا۔۔
1867 میںفرانسیسی فوج ایلوشیا ویشیا (اٹلی) پہونچی۔
1867 میںسوامی ویویکانند کی شاگرد سسٹر نویدیتا کی پیدائش آئرلینڈ میں ہوئی تھی۔
1868ء میںسینٹ برنارڈ پیرس لا میں سفید فام دہشت گردوں نے بے شمار سیاہ فاموں کا قتل کیا۔
1886 میںآزادی کی دیوی کا مجسمہ نیو یارک بندرگاہ کے کنارے نصب کیا گیا۔
1890 کو جرمن ایسٹ افریقی کمپنی نے اپنے اختیارات جرمن سرکار کو دے دئے۔
1914 میں امریکی سائنس داں ڈاکٹر جونس سلاک کی پیدائش ہوئی تھی۔
1914 روس نے ترکی کے خلاف جنگ کا اعلان کیا۔
1918ء میںآسٹریا اور ہنگری کی تقسیم کے بعد چیکوسلواکیہ آزاد ہوا۔
1919 میں امریکی کانگریس نے والسٹیڈ شراب بندی ایکٹ کے تحت ایسے مشروب پر پابندی لگادی جس میں ایک فیصد سے زیادہ الکوہل ہو۔
1923 ترکی نے آزادی کا اعلان کیا۔
1923ء کو ترکی جمہوریہ بنا اور پہلے صدر کمال اتاترک بنے۔
1942 میںروس کیپنکس میں 16 ہزار یہودیوں کو قتل کردیا گیا۔
1945 پہلا بال پوائنٹ پین بازار میں فروخت کے لئے لایا گیا اور 57 برسوں کے بعد اس کا پیٹنٹ کرایا گیا۔
1957 میںاسرائیلی پارلیمنٹ میں دستی بم کادھماکہ ہوا۔
1960 کوکیلی فورنیا اسٹیٹ فٹبال ٹیم کو لے جارہا چائرڈ طیارہ حادث کا شکار ہوا جس میں 16 افرادہلاک ہوئے۔
1960 میںمشہور مکے باز محمد علی نے پہلے پیشہ وارانہ مقابلے میں ٹنی میکر کو ہرایا۔
2006 ایک نائجیریائی مسافر طیارہ حادثہ میں سوکوتو کے سلطان ابراہم محمد سمیت 97 افراد ہلاک۔
2008 پاکستان کے بلوچستان صوبہ میں 4ء6 کی شدت کے زلزلہ میں 215 افراد کی موت۔

قومی
1627میںجہانگیر کا انتقال ہوا تھا انہیں لاہور میں راوی ندی کے قریب دفنایا گیا تھا۔
1851 کو بنگال برٹش انڈیا ایسوسی ایشن کا قیام ہوا تھا۔
1920 کو ڈاکٹر ذاکر حسین اور محمد علی جوہر کی کوششوںسے شیخ الہند مولانا محمود الحسن کے دست مبارک سے جامعہ ملیہ اسلامیہ کی بنیاد رکھی گئی۔
1971 کواڑیسہ میں آئے زبردست سمندری طوفان اور طوفانیلہروں میں دس ہزار افراد لقمہ اجل بن گئے۔
2005 ہندوستان کی راجدھانی نئی دہلی میں تین الگ الگ دھماکوں میں 66 افراد ہلاک۔

Last modified on Tuesday, 28 October 2014 10:51
Login to post comments