×

هشدار

JUser: :_بارگذاری :نمی توان کاربر را با این شناسه بارگذاری کرد: 830

عراق(Iraq)

آبان 14, 1393 507

عراق کا قدیم نام میسو پوٹامیا ہے۔ میسو = درمیان اور پوٹامیا= ندیاں، یہ نام دجلہ اور فرات ندی کے بیچ بسے پونے کی وجہ سے پڑا تھا۔عراق دنیا کے قدیم

ترین ملکوں میں شامل ہے۔ اس ملک میں پیدا ہوئی تہذ یب نے یوروپ اور ایشیا کی تہذیبوں کو سب سے ذیادہ متاثر کیا ہے۔ عراق دنیا کے ۵ سب سے ذیادہ پیٹرولیم پیدا کرنے والے ممالک میں شامل ہے ۔
۱۹۹۰ میں عراق نے پڑوسی ملک کویت پر قبضہ کر لیا اور اسکے بعد عراق کی اس زمانے میں تباہی کی کہانی شروع ہو گئی۔ امریکہ اور اسکے ہمنوا ممالک نے حملہ کرکے ۸۵۰۰۰ عراقی افواج کو مار ڈالا تھا۔ ۱۹۹۹ میں عراق میں صدی کا سب سے بڑا قحط پڑا۔ ۲۰ مارچ ۲۰۰۳ء کو امریکہ نے عراق پر بہانے سے حملہ کر دیا جب سے جاری جنگ ابھی ختم نہیں ہوئی ہے۔ عراقی صدر صدام حسین کے دونوں بیٹے موصول میں مارے گئے اس کے بعد خود صدام حسین کو بھی پھانسی دیدی گئی۔ اس وقت ملک میں امریکہ کی کٹھ پتلی سرکار بنی ہوئی ہے۔ اب تک کی جنگ میں لاکھوں عراقی اور ہزاروں امریکی اور برٹش فوجی مارے جا چکے ہیں۔

ملک کا نام     :     ریبپلک آف عراق
دارالسلطنت    :    بغداد
رقبہ        :    1,904,569 مربع کلو میٹر
آبادی        :    241,973, 879
زبانیں        :    عربی اور کردش
خواندگی        :    88.5 فیصد
مذہب        :    اسلام
سکہ        :    عراقی دینار  (۱ امریکی ڈالر =  ۶ء۱۴۶۹ دینار)
فی کس آمدنی     :    3,460 ڈالر
آزادی        :    ۳ اکتوبر ۱۹۳۲ ء

Login to post comments