Print this page

آج کا لطیفہ

مرداد 22, 1393 259
Rate this item
(0 votes)

ایک بڑے زمیندار اور ایک میراثی کی والدہ حج کرکے واپس وطن آئیں تو زمیندار کے گھر مبارکباد دینے والوں کاہجوم تھا۔ میراثی بھی زمین پر

بیٹھا زمیندار کی ٹانگیں دبا رہا تھا۔ جو کوئی آتا وہ زمیندار کو مخاطب کرتا اور کہتا ’’چودھری صاحب مبارک ہو، والدہ حج کرکے آئی ہیں۔‘‘ لیکن بیچارے میراثی کو کوئی مبارکباد نہ دیتا حالانکہ اس کی والدہ بھی حج کرکے آئی تھیں۔ جب تیرھواں چودھوا ں شخص میراثی کونظرانداز کرکے چودھری صاحب کو ان کی والدہ کے حج کی مبارکباد دے چکا تو میراثی کا پیما نہ  صبر لبریز ہو گیا چنانچہ جب ایک اور مہمان نے آ کر چودھری صاحب کو مبارکباد دی کہ آپ کی والدہ حج کرکے آئی ہیں تو میراثی نے اس کا بازو تھام لیا اور کہا ’’تم سب لوگ صرف چودھری صاحب کو مبارکباد دے رہے ہو کیا ان کی والدہ طواف میں اول آئی ہیں؟‘‘

Login to post comments